غواص تو فطرت نے بنايا ہے مجھے بھي

ليکن مجھے اعماق سياست سے ہے پرہيز

فطرت کو گوارا نہيں سلطاني جاويد

ہر چند کہ يہ شعبدہ بازي ہے دل آويز

فرہاد کي خارا شکني زندہ ہے اب تک

باقي نہيں دنيا ميں ملوکيت پرويز

LEAVE A REPLY

Please enter your comment!
Please enter your name here